امریکی خاتون جس کی کرونا وائرس سے موت، 66 سالہ خاتون آخری لمحات میں انٹرنیٹ پرکیا کر رہی تھی؟ انتہائی دلخراش انکشاف


امریکی ریاست مشی گن میں گزشتہ دن 66 سالہ لواین ڈیجن نامی خاتون جس کی کرونا وائرس کے سبب موت واقع ہو گئی، اپنے آخری لمحات میں انٹرنیٹ پر کیا کر رہی تھی جان کر آنکھیں نم ہو جائیں۔ دی مرر کے مطابق سینے کی تکلیف زیادہ ہونے پر وہ اپنے ایمازون الیگزا سے کرونا سے بچنے کے متعلق سوال پوچھتی رہی۔ موت سے چند گھنٹے قبل اس نے آخری سوال پوچھا کہ کیا تم اس تکلیف سے چھٹکارہ پانے میں میری مدد کر سکتے ہو؟۔
الیگزا ایمازون کی جانب سے ایک پروڈکٹ ہے جو پرسنل اسسٹنٹ کا کام کرتی ہے۔ اس مصنوعی زہانت کی حامل ٹیکناہوجی سے آپ مختلف حوالوں سے رہنمائی لے سکتے ہیں۔ آپ اس سے جو بھی سوال پوچھیں یہ آپکو اس کا حتی الامکان جواب دے دے گا۔ اس خاتون کو جب کوئی اور آسرا نظر نہ آیا تو اس نے اس سوفٹ وئیر سے مدد لینے کی کوشش کی کہ شاید کوئی حل نکل آئے۔ خاتون کو آخری وقت میں الیگزا سے یہ کہتے سنا گیا ہے کہ میں شدید تکلیف میں ہوں مجھے اس کا کوئی حل ڈھونڈنا ہے کیا تم اس میں میری مدد کر سکتے ہو۔ اس سے قبل اس نے یہ بھی پوچھا تھا کہ میں پولیس تک کیسے پہنچ سکتی ہوں؟۔ 


امریکی خاتون جس کی کرونا وائرس سے موت، 66 سالہ خاتون آخری لمحات میں انٹرنیٹ پرکیا کر رہی تھی؟ انتہائی دلخراش انکشاف امریکی خاتون جس کی کرونا وائرس سے موت، 66 سالہ خاتون آخری لمحات میں انٹرنیٹ پرکیا کر رہی تھی؟ انتہائی دلخراش انکشاف Reviewed by Admin on April 11, 2020 Rating: 5